سی پی این ای کی سماء ٹی وی کے پروڈیوسر اطہر متین کے قتل کی شدید الفاظ میں مذمت

0
219

پریس ریلیز
تاریخ: 18 فروری 2022ء

سی پی این ای کی سماء ٹی وی کے پروڈیوسر اطہر متین کے قتل کی شدید الفاظ میں مذمت

سی پی این ای کے رہنماؤں کی اطہر متین کے اہل خانہ سے اظہار تعزیت

سماء ٹی وی کے پروڈیوسر اور سینئر صحافی کا دن دہاڑے قتل ریاست کی ناکامی ہے، صدر سی پی این ای

صحافیوں کے تحفظ کے لئے حکومتی سطح پر کوئی حکمت عملی نظر نہیں آتی، کاظم خان

کراچی میں اسٹریٹ کرائم، بدامنی اور ڈاکہ زنی کی کھلم کھلا وارداتوں کا آج ایک اور صحافی نشانہ بن گیا ہے، عامر محمود

صحافی بے یار و مددگار اور ہر لمحہ بندوق کے نشانے پر صحافتی ذمہ داریاں ادا کر رہے ہیں، سی پی این ای

شہید صحافی کے قاتلوں کو جلد از جلد گرفتار کر کے قرار واقعی سزا دی جائے، سیکریٹری جنرل سی پی این ای

کراچی (پ ر) کونسل آف پاکستان نیوزپیپر ایڈیٹرز (سی پی این ای) نے سینئر صحافی اور سماء ٹی وی کے پروڈیوسر اطہر متین کے قتل کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔ سی پی این ای کے صدر کاظم خان اور سیکریٹری جنرل عامر محمود نے کراچی میں سماء ٹی وی کے پروڈیوسر اورصحافی اطہر متین کے قتل کے اندوہناک واقعے کو انتہائی افسوسناک قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ گنجان آبادی میں دن دہاڑے صحافی کا قتل ریاست کی ناکامی اور صحافیوں کے جان و مال کے تحفظ کی فراہمی کے حکومتی دعوؤں پر سوالیہ نشان ہے۔ صحافیوں کے تحفظ کے لئے حکومتی سطح پر کوئی حکمت عملی نظر نہیں آتی جبکہ صحافیوں کے تحفظ کے لئے بلند و بانگ دعوؤں اور کھوکھلے قوانین کے باوجود عملی طور پر صحافی بے یار و مددگار اور ہر لمحہ بندوق کے نشانے پر صحافتی ذمہ داریاں ادا کر رہے ہیں۔ کراچی میں اسٹریٹ کرائم، بدامنی اور ڈاکہ زنی کی کھلم کھلا وارداتوں کے نتیجے میں آج ایک اور صحافی نشانہ بن گیا ہے۔ سی پی این ای کے رہنماؤں نے مذمتی بیان میں سندھ حکومت اور وفاقی حکومت سے صحافی اطہر متین کے قاتلوں کو جلد از جلد گرفتار کرنے اور اسٹریٹ کرائم کے خاتمے سمیت صحافیوں کے تحفظ کے لئے ٹھوس اقدامات کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔ جبکہ صحافی اطہر متین کے اہل خانہ سے تعزیت کا اظہار کرتے ہوئے دعا کی ہے کہ اللہ تعالیٰ مرحوم کو اپنے جوار رحمت میں اعلیٰ مقام اور لواحقین کو صبر جمیل عطا فرمائے۔

جاری کردہ: کونسل آف پاکستان نیوزپیپر ایڈیٹرز۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here